چوہدری خاندان

پاکستان کے حکمران خاندان
اس خاندان کے افراد ضلع ناظم سے لیکر وزیر اعظم پاکستان تک فائز رہے ہیں
منصور مہدی
پاکستان کے حکمران خاندانوں میں چوہدری خاندان بھی اہمیت کا حامل ہے، یہ خاندان 1958سے سیاست میں ہے، اس خاندان کے بزرگ چوہدری ظہور الٰہی گجرات کے ایک قصبے نت میں 1921 میں پیدا ہوئے ، زمیندارہائی اسکول گجرات سے تعلیم حاصل کی اور پھر پھر عملی زندگی کا آغاز پولیس کی ملازمت سے کیا۔
قیام پاکستان کے بعد گجرات میں ٹیکسٹائل مل قائم کی، پروگریسو پیپرز کے مینجنگ ڈائریکٹر رہے، کامیاب صنعتکار اور سماجی شخصیت کے طور پر ابھرے۔
1958میں سیاست میں آئے، ریپبلکن پارٹی ، کنونشن مسلم لیگ، کونسل مسلم لیگ کے ٹکٹ پر 1963 ،1970 اور 1977میں ممبر اسمبلی متخب ہوئے۔
چوہدری ظہور الٰہی کے بیٹے چوہدری شجاعت حسین پہلی بار1981میں اپنے والد کے قتل کے بعد سیاست میں داخل ہوئے۔ وہ جنرل ضیاالحق کی مجلسِ شوریٰ میں شامل ہوئے۔ یہ قومی اسمبلی کی طرز پر، جنرل ضیا کے نامزد ارکان پر مشتمل غیر منتخب ادارہ تھا۔
جلد ہی بطور سیاستدان انہوں نے شہرت حاصل کرلی اور1985 کے غیر جماعتی انتخابات میں کامیابی کے بعد و زیر ا عظم محمد خان جونیجو کی کابینہ میں بطور وفاقی وزیر شامل ہوئے۔ چوہدری شجاعت حسین جاٹ برادری سے تعلق رکھتے ہیں جو پنجاب بھر میں پھیلی ہوئی ہے، جس کی وجہ سے مسلم لیگ۔ ق کے سربراہ کو ایسے طاقتور سیاستدان کی حیثیت سے جانا جاتا ہے، جو انتخابات جیتنے کی قوت رکھتا ہے۔
چوہدری شجاعت چار بار قومی اسمبلی کے رکن منتخب ہوچکے ہیں۔ پہلی بار1985، دوسری مرتبہ1988، اس کے بعد1997 اور پھر2002 میںممبر قومی اسمبلی منتخب ہوئے۔
بطور وفاقی وزیر ان کے پاس داخلہ، اطلاعات و نشریات، پیداوار اور صنعتوں کے قلمدان رہے۔ ان کی وزارتوں کے یہ قلمدان جنرل ضیا اور پھر نواز شریف کے دوروزارت عظمیٰ1990سے1993 کے درمیان رہے۔
اسی خاندان کے فرد چودھری پرویز الٰہی پاکستان کے پہلے نائب وزیراعظم رہ چکے ہیں،جبکہ پنجاب کے 2002سے 2007تک وزیراعلیٰ بھی رہے ہیں۔ وہ پاکستان مسلم لیگ ق کے اہم رہنما اور صوبائی صدر بھی ہیں۔
انھوں نے سیاست کی ابتدا مقامی سیاست سے شروع کی اور 1983میں پہلی بار ضلع گجرات کے چیئرمین منتخب ہوئے اور چار سال تک اس عہدہ پر براجمان رہے۔ 1985میں پنجاب اسمبلی ممبر منتخب ہوئے اور لوکل گورنمنٹ اینڈ رورل ڈویلپمنٹ کے وزیر بھی رہے، ان کی اس وزارت کا دورانیہ 8سال تک رہا، کیونکہ اگلے الیکشن 1988میں ہوئے، تب بھی پنجاب اسمبلی کے ممبر منتخب ہوئے۔ 1990کے انتخابات میں بھی ممبر اسمبلی منتخب ہوئے۔ 1993کے انتخابات میں پھر ممبر پنجاب اسمبلی منتخب ہو ئے۔
1993سے 1996تک پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف بھی رہے۔ 1997کے انتخابات میں چوہدری پرویز الہی پھر ممبر پنجاب اسمبلی منتخب ہو ئے اور سپیکر پنجاب اسمبلی مقرر ہوئے۔
2002کے انتخابات میں چھٹی بار پنجاب اسمبلی کے ممبر منتخب ہوئے، اور پنجاب کے وزیر اعلیٰ مقرر ہوئے اور پانچ سال تک اس عہدہ پر فائز رہے۔ 2008کے انتخابات میں پرویز الہی ساتویں بار ممبر پنجاب اسمبلی اور پہلی بار قومی اسمبلی کے ممبر منتخب ہوئے۔وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کی کابینہ میں یہ وفاقی صنعت اور دفاعی پیداوار مقرر ہوئے۔ 2011میں پاکستان میں پہلی بار نائب وزیر اعظم کا عہدہ تخلیق کیا گیا اور یہ اس پر فائز ہوئے۔ 2013کے انتخابات میں پھر ممبر قومی اسمبلی منتخب ہوئے۔
چودھری شفاعت حسین جو چوہدری شجاعت حسین کے بھائی ہیں، علاقائی سیاست میں سرگرم ہیں، یہ گجرات کے موجودہ ناظم ہیں۔ ایک اور بھائی چوہدری وجاحت حسین ہیں، یہ بھی علاقائی سیاست میں سرگرم ہیں۔ جبکہ چوہدری پرویز الہی کے بیٹے مونس الہی پی پی 110گجرات 3سے ممبر صوبائی اسمبلی ہےں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

%d bloggers like this: